Sitting on 22nd December 2020

Print

List of Business

 

صوبائی اسمبلی پنجاب

 

 

 

منگل 22دسمبر2020 کو 2:00بجے دن منعقد ہونے والے اسمبلی کے اجلاس کی فہرست کارروائی

 

 

 

تلاوت  اور نعت

 

......

 

سوالات

 

محکمہ آبپاشی سے متعلق سوالات

 

دریافت کئے جائیں گے اور ان کے جوابات دیئے جائیں گے۔

 

زیرو آور نوٹسز

 

علیحدہ فہرست میں مندرج زیرو آور نوٹسز

 

لئے جائیں گے اور ان کے جوابات دیئے جائیں گے۔

 

 

 

غیرسرکاری ارکان کی کارروائی

 

Text Box: حصہ اول 

 

                                                                                                                                                                                                                                               

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

(مسودہ      قانون)

 

            THE PUNJAB FREE AND COMPULSORY EDUCATION  (AMENDMENT) BILL 2020.

 

 

 

MIAN SHAFI MUHAMMAD:

MS SHAHEENA KARIM:

MS KANWAL PERVAIZ CH:

MALIK WASIF MAZHAR:

MS SHAZIA ABID:

MRS RAHEELA NAEEM:

SYEDA UZMA QADRI:

MS SADIA SOHAIL RANA:

MS FARAH AGHA:

MRS SABRINA JAVAID:

MS HASEENA BEGUM:

MS SHAMIM AFTAB:

MS USWAH AFTAB:

 

 

 

                to move that leave be granted to introduce the Punjab Free and Compulsory Education (Amendment) Bill 2020.

 

 

 

 

 

MIAN SHAFI MUHAMMAD:

MS SHAHEENA KARIM:

MS KANWAL PERVAIZ CH:

MALIK WASIF MAZHAR:

MS SHAZIA ABID:

MRS RAHEELA NAEEM:

SYEDA UZMA QADRI:

MS SADIA SOHAIL RANA:

MS FARAH AGHA:

MRS SABRINA JAVAID:

MS HASEENA BEGUM:

MS SHAMIM AFTAB:

MS USWAH AFTAB:

 

 

 

to introduce the Punjab Free and Compulsory Education (Amendment)
Bill 2020.

 

 

 

 

 

 

 

(جاری صفحہ 2…..)

 

 

 

 

 

 

 

Text Box: حصہ دوم 

 

                                                                                                                                                                                                                                               

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

(مفاد عامہ سے متعلق قراردادیں)

 

 

 

.1

جناب محمد صفدر شاکر:

اس ایوان کی رائے ہے کہ حلقہ پی پی۔104، ضلع فیصل آباد کی دو اہم سڑکوں اڈہ مرید والہ سے منڈی مامونکانجن اور ظفر چوک سے حدود ضلع فیصل آباد پر علاقہ کے عوام کا دوسرے شہروں کو آنے جانے کا انحصار ہے۔ ان دونوں سڑکوں کی حالت انتہائی ناگفتہ بہ ہے جس کی وجہ سے نہ صرف عوام کو آنے جانے میں مشکلات درپیش ہیں بلکہ آئے دن ڈکیتی، راہزنی کی وارداتیں ہوتی ہیں۔ لہذا استدعا ہے کہ ان دونوں سڑکوں کی دوبارہ فوری تعمیر شروع کی جائے۔

 

.........

 

 

 

.2

محترمہ عظمیٰ کاردار :

صوبہ میں حاملہ خواتین کے لئے Priority  پر Sehat Insaf Card   کا اجراء کیا جائے تاکہ ابتداء سے ہی ماں بچہ کی صحت کا تحفظ کیا جا سکے۔

 

.........

 

 

 

.3

محترمہ مہوش سلطانہ :

تحصیل چوآسیدن شاہ کو دوسری تحصیلوں سے ملانے والی تمام سڑکوں کو مرمت کیا جائے اور ڈبل کیا جائے، ان میں چوآسیدن شاہ سے کلرکہار روڈ، چوآسیدن شاہ سے چکوال روڈ شامل ہیں، اسکے علاوہ خصوصی طور پر چوآسیدن شاہ سے تحصیل پنڈدادنخان روڈ کو ڈبل کیا جائے اور سڈھانڈی گاؤں سے ضلع جہلم کو Connect  کرنے والی روڈ کو مرمت کیا جائے۔ یہ تمام دشوار گزار پہاڑی راستے ہیں، یہاں آئے روز ایکسیڈنٹ ہوتے ہیں اور یہاں سیاحوں کی بھی بڑی تعداد آتی ہے۔ لہذا ان تمام روڈز کو فی الفور Double Road  اور مرمت کیا جائے۔

 

.........

 

 

 

.4

جناب محمد طاہر پرویز :

تحقیق سے ثابت ہے کہ صوبہ پنجاب میں بچیوں کا پرائمری سے سیکنڈری کلاس میں ڈراپ آؤٹ سالانہ 15 لاکھ ہے اور اس ڈراپ آؤٹ کی بڑی وجہ لڑکیوں کی ہائی سکولوں تک رسائی کا نہ ہونا ہے۔ لڑکیوں کے سکولوں کی تعداد کا کم ہونا بھی ایک وجہ ہے۔ لہذا یہ ایوان حکومت پنجاب سے مطالبہ کرتا ہے کہ وہ صوبہ بھر میں خصوصاً جنوبی پنجاب میں لڑکیوں کا سکولوں سے ڈراپ آؤٹ کو روکنے کے لئے خاطر خواہ اقدامات کرے۔

 

.........

 

 

 

.5

محترمہ سعدیہ سہیل رانا :

مفت اور لازمی تعلیم بنیادی حقوق میں شامل ہے۔ آئین کا آرٹیکل 25 A  کہتا  ہے کہ ریاست پر لازم ہے کہ وہ 5 سے 16 سال کی عمر کے تمام بچوں کے لئے مفت اور لازمی تعلیم کی فراہمی کو یقینی بنائے۔ اس آرٹیکل کے تحت اس ایوان نے 2014 میں مفت اور لازمی تعلیم کا قانون منظور کیا۔ لیکن اس قانون کے رولز آف بزنس ابھی تک نہیں بنائے گئے۔ لہذا یہ ایوان حکومت پنجاب سے مطالبہ کرتا ہے کہ صوبہ بھر کے بچوں کی تعلیم کو یقینی بنانے کے لئے اور اس قانون پر موثر عمل درآمد کے لئے اس کو نوٹیفائی کیا جائے اور اس کے رولز آف بزنس بنائے جائیں۔

 

.........

 

 

 

لاہور

محمد خان بھٹی

 

سیکرٹری

 

Summary of Proceedings

Not Available

Resolutions Passed

Not Available